ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

"  لڑکیاں صرف ماں کی کوکھ یا پھر قبر میں محفوظ ہیں" طالبہ نے خودکشی کر لی.    "میں ناگن، تو سپیرا " پوسٹ سوشل میڈیا پر وائرل.    "منی ہائسٹ "(Money Heist )کاآخری حصہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ریلیز کیا جائے گا.    NA-133 کا ضمنی انتخاب.    NA-133 ضمنی انتخاب.    NCA میں "دی سندھو پراجیکٹ اینگما آف روٹس " کے عنوان سے فن پاروں کی نمائش.    KIPS-CSS کی جانب سے CSSمیں کامیاب امیدواروں کے اعزاز میں عشائیہ.    NCA میں ٹریڈیشنل آرٹ کورسز ورکشاپ کی اختتامی تقریب.    NA-75 الیکشن کمیشن کی رپورٹ پر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا ردعمل.    NA-133 ضمنی انتخاب : جمشید اقبال چیمہ کی اپیلوں پر الیکشن ٹربیونل کا فیصلہ جاری.    UAE گولڈن جوبلی: گلوبل ولیج تصویری مقابلہ درہم 50,000 تک جیتنے کا موقع.    IMFکے ساتھ معاملات طے پا گئے ، معاہدہ اسی ہفتے ہو گا، شوکت ترین.    UET لاہور انڈرگریجویٹ داخلہ فارم جمع کرانے کی آخری تاریخ.    Major progress in Lahore Police Anti-Drug Campaign.    "میرا ڈونا بلیسڈ ڈریم "کا پہلا ٹریلر جاری.   

اپوزیشن لیڈر سے ہاتھ ملانے کا مطلب ہے کرپشن کو تسلیم کرنا، وزیراعظم عمران خان

ویب ڈیسک
04 Nov, 2021

04 نومبر ، 2021

ویب ڈیسک
04 Nov, 2021

04 نومبر ، 2021

اپوزیشن لیڈر سے ہاتھ ملانے کا مطلب ہے کرپشن کو تسلیم کرنا، وزیراعظم عمران خان

post-title

 اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ سب کہتے ہیں وہ دو بڑے خاندانوں کے پیچھے پڑے رہتے ہیں، لیکن ان کی دو خاندانوں سے ذاتی لڑائی نہیں، بلکہ ان سے دوستی ہوا کرتی تھی۔ اسلام آباد میں اکادمی ادبیات پاکستان میں ایک تقریب سے خطاب میں ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں  اپوزیشن لیڈر پر اربوں روپے کی کرپشن کے الزامات ہیں اوراپوزیشن لیڈر سے ہاتھ ملانے کا مطلب ہے کرپشن کو تسلیم کرنا۔ 
وزیراعظم نے مزید کہا کہ موبائل فون بند نہیں کیے جا سکتے  لیکن بچوں کو رول ماڈل دے سکتے ہیں۔ انہوں نےمعاشرے میں  فکری انقلاب کی ضرورت پر زرور دیتے ہوئے کہا کہپاکستان میں جنسی جرائم بڑھ رہے ہیں جو ہمارے لیے شرم کی بات ہے۔ وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ بھارتی فلمیں 40 سال میں بہت بدلی ہیں اور اس کے اثرات ان کے خاندانی نظام پر مرتب ہو رہے ہیں، دلی کو ریپ کیپیٹل (Rape Capital)کہا جاتا ہے اور اگر ہم وہی ثقافت اپنائیں گے تو اس کے اثرات مرتب ہوں گے لہٰذا یہ دانشور کا کام ہے کہ وہ معاشرے کی رہنمائی کریں اور متبادل طرز زندگی کے بارے میں بتائیں۔ ان کا یہ بھی کہنا تھا کہہ حکومت دانشوروں اور مصنفین کی مکمل حمایت اور مدد کرے گی تاکہ وہہمارے معاشرے خصوصاً نوجوانوں کی رہنمائی کریں گے۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ سوشل میڈیا کے دور میں غیر محدود مواد دستیاب ہے، دانشوروں پر بڑی ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اخلاقی اور اخلاقی اقدار کے تحفظ پر قوم کی رہنمائی کریں۔
 


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM