ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

"  لڑکیاں صرف ماں کی کوکھ یا پھر قبر میں محفوظ ہیں" طالبہ نے خودکشی کر لی.    "میں ناگن، تو سپیرا " پوسٹ سوشل میڈیا پر وائرل.    "منی ہائسٹ "(Money Heist )کاآخری حصہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ریلیز کیا جائے گا.    NA-133 کا ضمنی انتخاب.    NA-133 ضمنی انتخاب.    NCA میں "دی سندھو پراجیکٹ اینگما آف روٹس " کے عنوان سے فن پاروں کی نمائش.    KIPS-CSS کی جانب سے CSSمیں کامیاب امیدواروں کے اعزاز میں عشائیہ.    NCA میں ٹریڈیشنل آرٹ کورسز ورکشاپ کی اختتامی تقریب.    NA-75 الیکشن کمیشن کی رپورٹ پر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا ردعمل.    NA-133 ضمنی انتخاب : جمشید اقبال چیمہ کی اپیلوں پر الیکشن ٹربیونل کا فیصلہ جاری.    UAE گولڈن جوبلی: گلوبل ولیج تصویری مقابلہ درہم 50,000 تک جیتنے کا موقع.    IMFکے ساتھ معاملات طے پا گئے ، معاہدہ اسی ہفتے ہو گا، شوکت ترین.    UET لاہور انڈرگریجویٹ داخلہ فارم جمع کرانے کی آخری تاریخ.    Major progress in Lahore Police Anti-Drug Campaign.    "میرا ڈونا بلیسڈ ڈریم "کا پہلا ٹریلر جاری.   

پنجاب یونیورسٹی نے کوڑا کرکٹ سے معیاری کھاد تیارکر نے والایونٹ بنا لیا

ویب ڈیسک
06 Dec, 2021

06 دسمبر ، 2021

ویب ڈیسک
06 Dec, 2021

06 دسمبر ، 2021

پنجاب یونیورسٹی نے کوڑا کرکٹ سے معیاری کھاد تیارکر نے والایونٹ بنا لیا

پنجاب یونیورسٹی کے سائنسدانوں کا عملی تحقیق میں کارنامہ۔ بائیوماس سے بہترین نامیاتی کھاد بنانے کے لئے مقامی ٹیکنالوجی سے سستا یونٹ تیار کر لیا۔ وائس چانسلر ڈاکٹر نیاز احمد نے بائیو ماس ریسورس یونٹ کا افتتاح کر دیا۔ اس موقع پر ان کا کہنا تھا کہ بائیو ماس ریسورس یونٹ باٹینیکل گارڈن نیو کیمپس میں قائم کیا گیا. بائیو ماس ریسورس یونٹ زرعی معیشت کو مضبوط کرنے میں کردار ادا کر سکتا ہے۔ڈاکٹر نیاز احمد کا مزید کہنا تھا کہ بائیو ماس ریسورس یونٹ عوام کو محفوظ سبزیوں اور پھلوں میں خود کفیل بنانے میں کردار ادا کرے گا۔یاد رہے اس منصوبے کے پرنسپل انویسٹیگیٹر شعبہ باٹنی کے ڈاکٹر محمد شفیق ہیں جبکہ منصوبے میں معاون اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر عائشہ نذیر ہیں۔ڈاکٹر نیازنے یہ بھی کہا کہ بائیو ماس ریسوس یونٹ سے 70 سے 100 فیصد سالڈ ویسٹ کو بہترین نامیاتی اور سستی کھاد کی تیاری میں استعمال کیا جا سکتا ہے اور بائیو ماس ریسورس یونٹ جیسے یونٹ قائم کر کے حکومت کو اربوں روپے کی بچت ہو سکتی ہے۔ ڈاکٹر محمد شفیق کے مطابق اس منصوبے سے شہر کے کوڑا کرکٹ، درختوں کے پتے و ٹہنیوں سے معیاری کھاد تیار کر سکتے ہیں جبکہ جانوروں کی ہڈیوں اور پودوں کی باقیات سے دیر پا نامیاتی کھاد تیار کی جا سکتی ہے۔


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM