ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

Foolproof Security on the eve of Urs of Data Ali Hajveri (RA) and Chehlum of Hazrat Imam Hussain (AS).    "سب کو بتانا مرشد آئے تھے، "عثمان مرزا کے تیور نہ بدلے.    "اپنے لیے اپنے ملک کیلیے ویکسین لگوائیں"،شیخ رشید کی قوم سے اپیل.    MoU signed between Punjab Hepatitis Control Program, Ferozsons Laboratories Limited and Inspectorate of Prisons.    Pakistan and Austria FMs meet in New York.    Prime Minister’s special aide Jamshed Cheema backs Qalandar Badshah.    "نیوزی لینڈ میں اتنی فورسز نہیں ہوں گی جتنی انہیں یہاں سیکیورٹی فراہم کی گئی".    Director General Punjab Emergency Department Regularized Services of 103 Rescuers.    CEO Vscopk Mian Afzal Javed distributes shields to participants.    "مشترکہ مقصد2021ء "کا انعقاد.    Awareness seminar against sexual harassment and violence against women organized by Lahore Police.    Police Challan shows involvement of Zahir Jaffer's father in the murder of Noor Mukadam.    Here’s Pak Boon, an elephant at the Taronga Zoo Sydney, enjoying a mud bath in the Australian sun.    Pakistan urges world to recognise new reality in Afghanistan.   

بھارت کو چھوڑ دیا کیونکہ میں کچھ وقت کیلئے بریک لینا چاہتی تھی: ملیکا شراوت

سید اسد علی
15 Sep, 2021

15 ستمبر ، 2021

سید اسد علی
15 Sep, 2021

15 ستمبر ، 2021

بھارت کو چھوڑ دیا کیونکہ میں کچھ وقت کیلئے بریک لینا چاہتی تھی: ملیکا شراوت

post-title

ممبئی:میڈیا رپور ٹ کے مطابق ایک انٹر ویو میں بولڈ اداکارہ ملیکا شراوت نے کہا کہ سکرین پر بوسہ دینے اور مختصر لباس پہننے پر میڈیا نے مجھے گری ہوئی عورت بنا کر پیش کیا لیکن اب بھارتی معاشرے میں سوچ تبدیل ہوئی ہے ، لوگوں میں زیادہ برداشت کا رویہ پیدا ہو گیا ہے ۔
ملیکا شراوت نے کہا کہ مردوں سے کبھی کوئی مسئلہ نہیں ہوا اور میڈیا میں بھی خواتین نے مجھے نشانہ بنایا، مردوں نے ہمیشہ میری تعریف کی لیکن میں سمجھ نہیں سکی کہ یہ خواتین میرے خلاف کیوں ہیں اور میرے لیے اتنی گندی سوچ کیوں رکھتی ہیں۔ملیکا شراوت نے کہا کہ اس وجہ سے میں نے بھارت کو چھوڑ دیا کیونکہ میں کچھ وقت کیلئے بریک لینا چاہتی تھی۔


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM