پاکستان فٹبال فیڈریشن کے مسائل،وزیر اعظم میدان میں آگئے

Saturday, April 10th, 2021, 02:24:00 PM

لاہور:وزیر اعظم عمران خان نے پاکستان فٹبال فیڈریشن (پی ایف ایف)پر قبضے کی مذمت کرتے ہوئے بات چیت کے ذریعے مسائل کو حل کرنے کی ہدایت کی ہے۔نجی ٹی وی  کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر برائے بین الصوبائی رابطہ فہمیدہ مرزا نے کہا کہ پاکستان فٹبال فیڈریشن کے ساتھ پیش آنے والے معاملات کی مذمت کرتی ہوں کیونکہ کرکٹ کے بعد فٹبال پاکستان میں سب سے زیادہ مقبول کھیل ہے اور مجھے افسوس ہے کہ چند لوگوں کی وجہ سے ہم پر پابندی لگی۔
انہوں نے کہا کہ میں نے یہی تجویز دی تھی کہ شفاف انتخابات کروائیں اور جو بھی الیکشن کے بعد منتخب ہوتا ہم اس کو تسلیم کرتے۔ان کا کہنا تھا کہ ہم فیڈریشن پر قبضے کو کسی صورت تسلیم نہیں کرتے اور پاکستان میں فٹبال چند لوگوں کے ہاتھوں یرغمال بنی ہوئی ہے۔یاد رہے کہ پاکستان میں فٹبال کی دو ایسوسی ایشنز کے درمیان تنازع اور فیفا کی منظورہ شدہ باڈی کو ہٹا کر فیڈریشن پر قبضہ کرنے پر فیفا نے پی ایف ایف پر پابندی عائد کردی تھی۔وفاقی وزیر نے کہا کہ فیفا کی جانب سے تعینات نارملائزیشن کمیٹی کو مزید وقت ملنا چاہیے تھا اور ہم بھی نارملائزیشن کمیٹی کے موقف کے ساتھ ہیں، چاہتے ہیں کہ فیفا کے لوگ خود آکر پاکستان میں معاملات دیکھے۔ان کا کہنا تھا کہ میرے خیال سے نارملائزیشن کمیٹی میں آپس میں اختلافات ہیں اور اسی سلسلے میں نارملائزیشن کمیٹی کیسربراہ ہارون ملک اور اشفاق حسین دونوں کو بلایا ہے۔انہوں نے کہا کہ بات چیت کے ذریعے مسئلہ حل کرنا چاہتے ہیں اور فیفا کو فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی ضرور بھیجنی چاہیے۔
فہمیدہ مرزا نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کو بھی فٹبال کے معاملات سے آگاہ کیا ہے اور انہوں نے بھی پاکستان فٹبال فیڈریشن پر قبضے کی مذمت کی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم نے بھی یہی ہدایت کی ہے کہ بات چیت سے مسئلے کو حل کریں جبکہ فیڈریشن میں کسی کے خلاف کارروائی سے متعلق فیصلہ عمران خان سے مشاورت کے بعد کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ میں نے تمام فیڈریشن کو آڈٹ کرانے کا پابند کیا ہے اور پاکستان میں اسپورٹس کا کلچر دوبارہ بحال ہورہا ہے۔